آیت اللہ ہاشمی شاہرودی حوزہ علمیہ قم میں ایک عظیم اُستاد اور اسلامی جمہوریہ کے نظام کی ایک اہم ترین ستون تھے۔

سید احمد رضوی


روحانیت نیوز(قم) صدر جامعہ روحانیت بلتستان حجت الاسلام والمسلمین سید احمد رضوی اور ایک اعلیٰ سطحی وفد کے ہمراہ آیت اللہ العظمیٰ سید محمود ہاشمی شاہرودی سے انکے دفتر میں انکے فرزند حجت الاسلام ۔۔۔ اور ان سے ملاقات
اس ملاقات میں صدر جامعہ روحانیت بلتستان نے آیت اللہ شاہرودی کے انتقال کو عالم اسلام کے لئے عظیم نقصان قرار دیتے ہوئے کہا کہ فقیہ عالی قدر اور تشخیصِ مصلحتِ نظام کونسل کے سربراہ آیت اللہ العظمیٰ سید محمود ہاشمی شاہرودی رضوان اللہ علیہ) کی رحلت عالم اسلام میں تمام لوگوں کے لیے رنج و الم کاسبب بنا, اُن کی علمی خدمات، اسلامی نظام اور حوزہ علمیہ کے لیے اُن کی مختلف فقہی، اصولی اور قانونی قابلِ قدر خدمات ہیں۔
مرحوم حوزہ علمیہ قم میں ایک عظیم اُستاد اور اسلامی جمہوریہ کے نظام کی تنظیم میں ایک اہم ترین ستون تھے انہوں نے اپنے بہت سے علمی آثار اور برکات (ہمارے درمیان) چھوڑ کر گئے ہیں۔
حجت الاسلام والمسلمین سید احمد رضوی نے آیت اللہ شاہرودی کے فرزندوں کی خدمت میں پاکستان کے عوام اور علماء کرام کی طرف سے تسلیت پیش کی.
اس موقع پر آیت اللہ ہاشمی شاہرودی کے فرزند نے جامعہ روحانیت بلتستان پاکستان کے وفد کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا آیت اللہ ہاشمی مرحوم ہمیشہ دینی طالبعلوں کے لئے ہمیشہ تاکید کے ساتھ نصیحت کرتے تھے کہ نماز شب ترک نہ کریں اور کئی سال جو میں نے بھی انکے ساتھ گزارے ہیں مجھے یاد نہیں کہ انھوں نے بھی ایک دن بھی نماز شب نہ پڑھی ہو حتی جب مرحوم ہسپتال میں داخل تھے تب بھی سخت بیماری کے باوجود نماز شب ترک نہیں کرتے تھے۔

روحانیت نیوز، صدر جامعہ روحانیت بلتستان پاکستان حجت الاسلام والمسلمین سید احمد رضوی نےرہبر انقلاب اسلامی کے دیرینہ ساتھی، سابق ایرانی چیف جسٹس اورتشخیص مصلحت نظام کونسل کے چیئرمین آیت الله ہاشمی شاہرودی کی رحلت کے دلسوز موقع پردلی رنج وغم اور افسوس کا اظہا رکرتے ہوئے کہاہےکہ آیت اللہ العظمی ہاشمی شاہرودی نے علوم آل محمدؑ کی ترویج، تحقیق اور تبلیغ کے لیے اپنی زندگی وقف کر دی۔

حضرت فاطمہ معصومہ سلام اللہ علیھا حضرت امام موسی کاظم علیہ السلام کی صاحبزادی، حضرت امام علی رضا علیہ السلام کی ہمشیرہ اور امام محمد تقی جواد علیہ السلام کی پھوپھی ہیں۔

حضرت فاطمہ معصومہ سلام اللہ علیھا کی ولادت یکم ذیقعد 173 ھجری قمری اور رحلت 10 ربیع الثانی کو قم میں ہوئی۔

 آپ امام موسی کاظم علیہ السلام کی سب سے بڑی اور سب سے ممتاز صاحبزادی تھیں۔ آپ کی آفاقی شخصیت، بے پناہ فضائل و کمالات کا مظھر تھی-

کل شب,  امام حسن عسکری علیہ السلام کی ولادت باسعادت کی مناسبت سے  منعقدہ باوقار جشن کے اختتام پر جامعہ روحانیت بلتستان  کے دورہ پنجم کی کابینہ سے حلف برداری کی تقریب  منائی گئی.  

This e-mail address is being protected from spambots. You need JavaScript enabled to view it.  Etaa

طراحی و پشتیبانی توسط گروه نرم افزاری رسانه