جامعہ روحانیت بلتستان کے صدر سید احمد رضوی  نے کراچی ٹارگٹ کلنگ کے مختلف واقعات پر شدید رد عمل کا اظہار کرتے  ہوئے کہا محبان اہلبیت کو بے دردی سے شہید کرنا ملکی سالمیت کو خراب کرنےکی ناکام کوشش ہے۔ 

سرکاری اداروں میں چھپے ضیاء الحق کی باقیات یہاں کے محب وطن شہریوں کے خلاف سازش میں مصروف ہیں
سید احمد رضوی
روحانیت نیوز()جامعہ روحانیت بلتستان کے صدر حجت الاسلام والمسلمین سید احمد رضوی  نے کہا کہ خطہ بے آئین میں آئینی حقوق کے لیے آواز اٹھانے کے جرم میں شیخ حسن جوہری کی گرفتاری کھلی ریاستی دہشتگردی ہے  ، ۷۱سالوں سےبنیادی شہری حقوق سے محروم گلگت بلتستان کے باسی اپنے حقوق کے حصول کے لیے آواز اٹھاتے آئے ہیں۔ علمائے کرام سمیت بہت سارے ملت کا درد رکھنے والے دانشور اسی جرم میں پابند سلاسل ہوچکے ہیں۔
صدر جامعہ روحانیت بلتستان کا کہنا تھا کہ ارباب اقتدار کو معلوم ہونا چاہیے کہ ایسی گرفتاریوں سے ملت کے جذبات ٹھنڈے ہونے کے بجائے مزید بڑھ جاتے ہیں۔ سرکاری اداروں میں چھپے ضیاء الحق کی باقیات یہاں کے محب وطن شہریوں پر مختلف الزامات کے ذریعے انہیں آئینی حقوق سے محروم رکھنے کی دانستہ کوشش کررہی ہیں۔ ہم انہیں کسی صورت کامیاب نہیں ہونے دیں گے۔
انھوں نے کہا کہ حکومت کو جان لینا چاہیے کہ لوگوں کو اپنے بنیادی حقوق سے محروم رکھ کر نہیں بلکہ ان کے حقوق کی فراہمی کے ذریعے ہی ان کو خاموش کیا جاسکتا ہے۔

مورخہ ۱۸ جنوری  2019 بروز جمعہ جامعہ روحانیت  بلتستان کے زیر اہتمام آٹھویں علمی و تحلیلی نشست  کا انعقاد  ہوا۔ حضرت فاطمہ الزہراء سلام اللہ علیہا کی شخصیت مستشرقین کی نگاہ میں،  کے عنوان سے یہ نشست منعقد ہوئی۔  خطیب محترم جناب حجت الاسلام محمد عسکری ممتاز نے اس موضوع پر سیر حاصل گفتگو کی۔

 مورخہ 17 جنوری 2019 بروز جمعرات بلتستان سے ایران عراق میں مقدس مقامات کی زیارات کے لیے آئے ھوئے اساتید کے ساتھ جامعہ روحانیت بلتستان  کی جانب سے صمیمی نشست کا انعقاد کیا گیا.

This e-mail address is being protected from spambots. You need JavaScript enabled to view it.  Etaa

طراحی و پشتیبانی توسط گروه نرم افزاری رسانه