شمائل مصطفوی ( پیغمبر اعظم " ص " کی ایک سو خصلتیں ) قسط :  آخری قسط 

 66:  اپنی خاطرکبھی کسی سےانتقام نہیں لیامگریہ کہ حریم حق پامال کرے۔۔

 67:  آپ کےنزدیک جھوٹ سےزیادہ منفورترین خصلت کوئی چیز نہیں تھی ۔۔

 68:  خوشحالی اورغضب دونوں وقت یادخداکےعلاوہ زبان پرکچھ نہیں ہوتاتھا۔۔

 69:  ہرگز اپنے لیےدرھم ودینار جمع نہیں کیا۔۔

 70:  اپنےغلاموں سےزیادہ کھانےپینےکی اشیاء نہیں رکھتےتھے

 71:  زمین پربیٹھتےتھےاورزمین پر کھاناکھاتےتھے

 72:  اورزمین پرسوتےتھے

 73:   اپنی جوتی اور  کپڑوں پرخودپیوندلگاتےتھے

 74:  اپنےہاتھوں سےدودھ دوھوتےتھےاوراونٹ کےپیروں کوخودباندھتےتھے

 75:  جوبھی سواری مہیاہوتی سوارہوتےتھے

 76:  جہاں بھی تشریف لےجاتےاپنی عباکوبچھونا اورفرش کےطورپراستعمال کرتےتھے

 77:  اکثرآپ کےلباس سفیدہوتےتھے

 78:  جب نیالباس خریدتےتوپراناکسی مسکین کوبخش دیتےتھے

 79:  قیمتی لباس روزجمعہ کےلئےمخصوص تھا

 80:  جوتی اورلباس پہنتےوقت دائیں سےشروع کرتےتھے

 81:  پریشان بالوں کوناپسندکرتےتھے

 82:  بدبوسےبہت نفرت کرتےتھے

 83:  ہمیشہ خوشبولگاتےتھےاورآپ سب سےزیادہ خوشبوکی خریدپرخرچ کرتےتھے

 84:  ہمیشہ باوضوہوتےتھےاوروضوکرتےوقت مسواک کیاکرتےتھے۔۔

 85:  ہرماہ کی 13  14   15تاریخ کوروزہ رکھتےتھے

 86:  ہرگزکبھی کسی نعمت کی مذمت نہیں کی۔۔۔

 87:  خداکی چھوٹی سی نعمت کوبھی بڑاگردانتےتھے

 88:  نہ کبھی کسی غذاکی تعریف کی اورنہ ہی برائی کی۔۔

89:  کھانےمیں  کسی بھی چیزکوحاضرکرتےتوتناول فرماتےتھے

 90:  سفرہ (دسترخوان )سےاپنےسامنےسے تناول فرماتےتھے

 91:  کھانےکےموقع پرسب سےپہلےحاضرہوتےتھےاورسب سےآخرمیں ہاتھ کھینچتےتھے

 92:  جب تک بھوک نہیں  لگتی تھی کھانامیل نہیں فرماتےتھےاورکچھ لقمےکھانےکی خواہش ہوتےہوئےترک کردیتےتھے

 93:  آپ نےکبھی دوقسم کےکھانےکواپنےمعدےمیں جمع نہیں کیا۔۔

 94:  کھانے کے دوران کبھی ڈکارنہیں لیا

 95:  جب تک ممکن تھااکیلےکھانا تناول نہیں فرمایا

 96:  کھانےکےبعدہاتھوں کودھوتےتھےاورپیٹ کےبل لیٹاکرتےتھے

97:  پانی پیتےوقت تین گھونٹ میں پیتےتھے اورپہلے بسم اللہ۔۔ اوراخرمیں   الحمدللہ پڑھتےتھے

98:  پردہ نشین دوشیزاوں سےبھی زیادہ باحیا تھے

99:  جب گھرمیں داخل ہوناچاہتےتھےتوتین باراجازت لیتےتھے

100:  گھرکےداخلی اوقات کو تین حصوں میں تقسیم کرتےتھے :

 الف : ایک حصہ خداکی عبادت کےلئے

 ب : ایک حصہ گھر والوں کےلئے۔۔

 ج : ایک حصہ اپنےلئے اوراپنےحصےکےوقت کولوگوں کےلئےبھی دیتےتھے۔۔۔

منابع

کتاب منتھی الامال           محدث قمی

کتاب مکارم الاخلاق          مرحوم طبرسی

پیشکش :

 الهدی اسلامی تحقیقاتی مرکز ( اتم ) پاکستان

Comments (0)

There are no comments posted here yet

Leave your comments

Posting comment as a guest. Sign up or login to your account.
0 Characters
Attachments (0 / 3)
Share Your Location

This e-mail address is being protected from spambots. You need JavaScript enabled to view it.  Etaa

طراحی و پشتیبانی توسط گروه نرم افزاری رسانه