تحریر ظہیر عباس جٹ
اخلاص
شیخ رجب علی خیاط کے دوستوں میں سےایک نقل کرتا ہے کہ شیخ رجب علی خیاط نے بیان کیا کہ تهران کی مرکزی مسجدجمعہ میں راتوں میں بیٹھ کر قران کریم کادرس دیتاتھا۔ ایک رات دو بچے آپس میں لڑائی کر رہے تھے۔ ایک بچہ دوسرے پر غالب آگیا۔
دوسرا بھاگ نکلا تاکہ مجھے مارنہ پڑے۔ وہ بچہ دوڑتا ہوا میرے پاس آیا اور زانوں پر بیٹھ گیا میں نے اسی فرصت سے فائدہ اٹھایا۔ سوره حمد سنی اور یہ کام اس رات میرا سارا وقت لے گیا ۔

بہتر ہے حقیقت جاننے کے لیے مکہ کا سفر کریں۔ شاید ہمیں مکہ پہنچنے میں تھوڑی دیر ہوگئی ہے کیونکہ نبی ص رحلت فرما گئے ہیں۔ اب کیا کیا جائے بہتر ہے اب جبکہ پیغمبر اسلام ص ہمارے درمیان نہیں اور ان کی عظیم روح ملکوت اعلی سے ملحق ہو چکی ہے، تو اب ایسا کرتے ہیں کہ ان کے سچے ترین صحابی کے پاس چلتے ہیں ۔
یہاں جناب ابوذر کو تلاش کرتے ہیں ۔کیونکہ وہ زمانہ کےسچے ترین شخص ہیں۔

بداء قرآن وحدیث کی روشنی میں
بداءکے لغوی معنی مخفی اور پنہان ہونے کےبعد ظاہرو آشکار ہونا ہیں ۔جب یہ لفظ انسان کے لئے استعمال ہو تو اس کا معنی یہ ہے کہ کسی شخص پر کوئی شئے مخفی وپنہان ہونےکےبعد ظاہرو آشکارہوجائے۔

لیلتہ الرغائب کیا ہے؟
ماہِ رجب کی پہلی شب جمعہ کو لیلتہ الرغائب کہا جاتا ہے۔

لیلتہ الرغائب کی فضیلت
واضح رہے کہ لیلتہ الرغائب کیلئے رسول اکرمؐ سے بے شمار فضیلت کے ساتھ ایک عمل وارد ہوا ہے جس کو ابن طاؤوسؒ نے اقبال میں نقل کیا ہے۔
شیخ طوسیؒ اپنے اسناد سے نبیِ کریمؐ سے روایت کرتے ہیں کہ آپؐ نے فرمایا:

معاشرتی مشکلات اور ان کےراه حل امیرالمومنین حضرت علی(علیه السلام)کی نظر میں
همارا معاشره هرروز اخلاقی سقوط اور بےعملی اور عدم برداشت کی طرف بڑھ رهاہے۔اس کی بنیادی وجه تعلیم اور تهذیب میں جدائی هے۔چوده سوبرس گزرنےگزرنےکےباوجود تعلیم و تربیت کی اصلی کتاب قرآن مجید کےفردی اور اجتماعی قوانین سےهم بےبهره هیں۔بدکرداری اور سوءعمل میں ہمارا کوئی ثانی نهیں ہے۔امت مسلمه پر جوآفتیں اور مصیبتیں پڑھ هی هیں ان کےذمه دار خود مسلمان هی هے۔حرام خوری هرجگه نظرآتی هےدهوکه دهی،فراڈ،خیانت مسلمان معاشرےکی پهچان بن چکی هے۔فحاشی کےاڈےاور زنا کےمراکز اور زناکی دعوتیں عام هوچکی هیں۔

This e-mail address is being protected from spambots. You need JavaScript enabled to view it.  Etaa

طراحی و پشتیبانی توسط گروه نرم افزاری رسانه